HomeWorld PakistanwapNational security is not possible without equal development of all: Imran Khan

National security is not possible without equal development of all: Imran Khan

security is not possible without equal

پاکستان کے وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ نیشنل سکیورٹی تب تک نہیں ہو سکتی جب تک معاشرے میں سب کی یکساں ترقی نہ ہو۔پیر کو اسلام آباد میں اسلام آباد پالیسی ریسرچ انسٹی ٹیوٹ میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ ’کوئی بھی ملک محفوظ نہیں ہو سکتا جس میں چھوٹا سا طبقہ امیر ہوتا جائے اور باقی لوگ پیچھے رہ جائیں۔‘

سب کی یکساں ترقی کے بغیر قومی سلامتی ممکن نہیں: عمران خان

وزیراعظم کا مزید کہنا تھا کہ قانون کی حکمرانی بنیادی چیز ہے اور اس کی بدولت ہی جمہوریت آگے بڑھتی ہے۔ ’قانون کی حکمرانی نہ ہو تو انتخابات میں وہی جرائم پیشہ عناصر اوپر آ جاتے ہیں۔‘ عمران خان کا کہنا تھا بدعنوانی قانون کی حکمرانی نہ ہونے کی علامت ہے۔وزیراعظم نے پاکستان میں تھنک ٹینکس کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ ’اس کی وجہ سے حقیقی سوچ سامنے آتی ہے۔‘

انہوں نے کہا کہ ’تھنک ٹینکس نہ ہوں تو دوسرے آپ کو بتاتے ہیں بجائے اس کے کہ آپ خود یہ کریں۔‘انہوں نے افغانستان کا تذکرہ کرتے ہوئے کہا کہ ’اسی وجہ سے یہ کہا گیا کہ پاکستان کی وجہ سے وہ کامیاب نہیں ہوئے۔‘ان کا کہنا تھا کہ ’جس ملک نے 80 ہزار جانوں کی قربانی دی، مگر کبھی کریڈٹ نہیں دیا گیا، الٹا بدنام کیا گیا کہ ڈبل گیم کی جا رہی ہے۔‘

انہوں نے کہا کہ کبھی کسی قیادت نے تھنک ٹینک کے بارے میں نہیں سوچا، اسی لیے ہمارا پیغام کبھی صحیح معنوں میں دنیا میں نہیں گیا۔’وہ برا وقت تھا، جب ہم ان کا ساتھ بھی دے رہے تھے اور وہ ہمارے اوپر بم بھی برسا رہے تھے۔‘ عمران خان کے مطابق ہمارے پاس ’دانشور قیادت نہیں تھی، ملک پرو امریکہ اور اینٹی امریکہ گروہوں میں تقسیم ہو گیا تھا۔‘

عمران خان نے اسلاموفوبیا کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ یہ صرف ہمارا قصور نہیں ہے۔ ’کوئی بھی مذہب شدت پسندی کی اجازت نہیں دیتا، انسانوں میں قدامت پسند، لبرل اور انتہا پسند ہوتے ہیں۔‘عمران خان نے انڈیا کے زیراہتمام کشمیر کے حوالے سے کہا کہ ’اس وقت وہاں جو کیا جا رہا ہے، اس پر مغرب ممالک تنقید نہیں کرتے ہیں۔‘

’مسلمان دنیا میں بھی تھنک ٹینکس ہوتے تو اس معاملے کو اٹھاتے۔‘انہوں نے پاکستان میں نظام تعلیم میں موجود تین اقسام کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ کچھ بچے انگلش میڈیم سکول میں پڑھتے ہیں جبکہ کچھ اردو میڈیم اور کچھ مدارس میں پڑھتے ہیں۔’میں جب پڑھتا تھا تب چار پانچ انگلشن میڈیم سکول تھے، بجائے اس کے سسٹم کو ٹھیک کیا جاتا، مزید خراب کر دیا گیا۔‘

عمران خان نے بتایا کہ ’اس وقت امریکہ کے تھنک ٹینکس ہمیں دنیا کی خطرناک ترین قوم قرار دے رہے ہیں لیکن ہماری طرف سے کوئی جواب نہیں آ رہا۔‘’امید کرتا ہوں پاکستان میں اور بھی تھنک ٹینک بنیں گے جو ہمارا بیانیہ دنیا کے سامنے رکھیں گے۔‘

عمران خان نے بتایا کہ جب وہ پہلی مرتبہ انگلینڈ گئے تو وہاں اس وقت ایک گروپ ہوتا تھا جس کو سکن ہیڈ کہتے تھے۔ ’اس کو جو بھی ایشیائی ملتا، اس کو پکڑ کر مارتے پیٹتے۔‘انہوں نے بتایا کہ اگر وہ صرف سکن ہیڈ پر توجہ مرکوز کرتے تو انہیں انگلینڈ کا معاشرہ شدت پسند لگتا۔ ’انگلینڈ کا معاشرہ ایک لبرل معاشرہ ہے۔‘

National security is not possible without equal development of all: Imran Khan

Pakistan’s Prime Minister Imran Khan has said that national security cannot be achieved unless there is equal development for all in the society. Addressing a function at the Islamabad Policy Research Institute in Islamabad on Monday, Prime Minister Imran Khan said that “no country can be safe in which a small section becomes rich and the rest are left behind.” security is not possible without equal

The Prime Minister further said that rule of law is the basic thing and it is through this that democracy moves forward. security is not possible without equal “Without the rule of law, the same criminal elements come to the fore in elections.” Imran Khan said that corruption is a sign of lack of rule of law. Stressing on the need for think tanks in Pakistan, the Prime Minister said, “Because of this, real thinking emerges.” security is not possible without equal

“If there are no think tanks, others will tell you instead of doing it yourself,” he said. Referring to Afghanistan, he said, “That is why it was said that they did not succeed because of Pakistan.” “The country that sacrificed 80,000 lives, but was never given credit, has been discredited for playing a double game,” he said. “No leadership has ever thought of a think tank, so our message has never really reached the world,” he said. “It was a bad time, when we were supporting them and they were dropping bombs on us.”

According to Imran Khan, we had “no intellectual leadership, the country was divided into pro-American and anti-American groups.” Referring to Islamophobia, Imran Khan said that it was not just our fault. “No religion allows extremism. Humans are conservative, liberal and extremist.” Referring to Indian-administered Kashmir, Imran Khan said, “Western countries do not criticize what is being done there at the moment.” security is not possible without equal

“If there were think tanks in the Muslim world, they would raise this issue.” Referring to the three types of education system in Pakistan, he said that some children study in English medium schools while some study in Urdu medium and some in madrassas. “When I was studying, there were four or five English medium schools. Instead of fixing the system, it was made worse.”

Imran Khan said, “At the moment, American think tanks are calling us the most dangerous nation in the world, but there is no response from us.” “I hope there will be more think tanks in Pakistan that will present our statement to the world.” Imran Khan said that when he first went to England, there was a group called Skinhead. “Any Asian he found would be caught and beaten.” He said that if he had only focused on skinheads, he would have found the society in England extremist. “England is a liberal society.”

Read More:: Rameez Raja’s proposal for four-nation T20 series including Pakistan and India

Ayesha
Ayesha
I am here! providing you latest News| Technology News |Trending Latest News Updates
RELATED ARTICLES

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

- Advertisment -

Most Popular

Latest Episodes

Latest